June 22, 2018

کہنا کیسا ہے‘‘Mom’’ یا ڈاڈ‘‘Dad’’والدین کو مام ؟

 

سوال: السلام علیکم مفتی صاحب،

ہم اپنے والدین کو مام یا ڈاڈ کے الفاظ سے بُلا سکتے ہیں؟ یا نہیں؟

(رحمان بامہیال)۔

جواب: وعلیکم السلام و رحمۃاللہ،

اسلامی طرززندگی انوکھی و نرالی ہے،اور اس کے ہرحکم میں ادب اور اخلاق کو اہمیت دی گئی ہے،جہاں تک والدین کو مام یا ڈاڈ بلانے کی بات ہےیہ قرآن کے طرزکے خلاف ہے،اور یہ تویھود ونصاری کا طریقہ اور تھذیب ہے جس پر کے فخر بھی کرتے ہیں،جن کا طریقہ تو قرآن اورحدیث کے بالکل خلاف ہوتا ہے۔واضح رہےکہ : باپ کیلئے قرآن میں  ‘‘اب’’ کا لفظ آیا ہے،(القرآن،سورۃ البقرۃ:170)،

اور ماں کے لئے ‘‘ ام’’ کا لفظ آیا ہے۔(القرآن،سورۃ النساء:23)

لھذا مسلمانوں کو چاہیئے کہ اپنے بچوں کے زبانوں سے ‘‘امی،امی جان’’ ابو،ابو جان’’ جیسے الفاظ کے کہنے کی ترغیب دیں تو زیادہ بہتر ہوگا۔اس میں اسلامی معاشرہ کا ماحول بھی ہوگا اور قرآن و حدیث پر عمل بھی۔۔۔